November 19, 2015

The Permanent Solution for Sindh and Sindhi Nation - proposed by a Sindhi brother

سندھ اورسندھی عوام کے مسائل کا مستقل حل


تحریر:۔ ایک حقیر،فقیر، بے تصویر، لاچار ومجبور سندھی کے دل کی آواز



سنتے چلے آئے ہیں کہ سیاست میں ”بدلتا ہے رنگ آسماں کیسے کیسے“اور”کل کے دوست آج کے دشمن“ کوئی بڑی بات نہیں ہوتی اور سیاست کی دنیا میں ایسا ہوتا ہی رہتا ہے، سیاستدانوں اور سیاسی جماعتوں کے مفادات بدلتے ہیں …… اصول، ضابطے اور خیالات تبدیل ہوجاتے ہیں …… دوست، دشمن اور دشمن دوست بن جاتے ہیں۔ 

بی بی رانی شہید کو گزرے 8 سال بیت چکے ہیں لیکن لگتا ہے کہ کل ہی کی بات ہے …… بی بی رانی شہید کی شہادت کے بعدپیپلزپارٹی کے کارکنان میں شدید غم وغصہ تھا، ان کے دل خون کے آنسو رورہے تھے، ذوالفقار علی بھٹو کے عدالتی قتل، شاہنواز بھٹو کے سفاکانہ قتل اور میرمرتضیٰ بھٹو کے ماورائے عدالت قتل کے بعد بی بی رانی کی شہادت کے المناک واقعہ نے غریب سندھیوں کی غیرت کو للکار دیاتھا، انکے صبر کا پیمانہ لبریز ہوچکا تھا اور ہرسندھی جیالا سرسے کفن باندھ کر ”توڑ دو توڑ دو پاکستان توڑدو“ کے نعرے لگارہا تھا۔ ایسے میں آصف علی زرداری نے اپنے مفادات کی خاطر ”پاکستان کھپے“ کا نعرہ لگایا، غریب جیالوں کے جذبات کو سرد کرنے کیلئے”جمہوریت سب سے بڑا انتقام ہے“ جیسے خوشنمانعرے دیئے، وفاق، بلوچستان اور سندھ کی حکومت حاصل کی اورآصف علی زرداری کو صدرپاکستان ہونے کا اعزاز حاصل ہوگیا۔آصف علی زرداری کے قریبی دوست ڈاکٹر ذوالفقار مرزا نے کھلے عام کہاتھا کہ اگر آصف زرداری ”پاکستان کھپے“ کا نعرہ نہ لگاتے وہ ہم پاکستان توڑدیتے، جس سے بخوبی اندازہ لگایاجاسکتا ہے کہ جیالوں کے جذبات کس نہج پر تھے مگر افسوس سندھ اور سندھی عوام کے مفادات کا سودا کرلیاگیا، اب ہرقدم پر ساتھ دینے والا دوست ذوالفقار مرزا بھی دشمن بن ہی چکاہے، اب بدین شہر کی سلطنت بھی ہاتھ سے گئی۔بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے میں آصف علی زرداری شکوہ کررہے ہیں کہ انتخابی معاملات کی باگ ڈورالیکشن کمیشن کے بجائے کسی اور کے ہاتھ میں ہے۔ وقت گزر جاتا ہے لیکن پچھتاوا ساری زندگی ساتھ رہتا ہے، اب آصف علی زرداری کے چیخنے چلانے اور رونے دھونے کا کوئی فائدہ نہیں اورزمینی حقائق تسلیم کرنے میں ہی فلاح اور بھلائی ہے، زمینی حقیقت یہ ہے کہ فوج مکمل طور پر بلاخوف وخطر آئین وقانون سے ماوراء ہوکر اپنے Cronies امیدواروں کو بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے میں کامیاب بنانے میں مصروف ہے۔ ذوالفقارعلی بھٹو کا قتل ہو یا بے نظیر بھٹو کی شہاد ت ہو، آصف علی زرداری کا پاکستان کھپے کا راگ آج بے وقت کی راگنی ثابت ہوچکا ہے جس کے نتائج آصف زرداری، ان کی جماعت کے مخلص کارکنان اور رہنما بھگت رہے ہیں۔ آصف علی زرداری کو میرا مخلصانہ مشورہ ہے کہ وہ خیال وخواب کی دنیا سے باہر آجائیں اور زمینی حقائق کو تسلیم کرتے ہوئے ”پاکستان نہ کھپے“ کا نہ صرف نعرہ لگائیں بلکہ اس حوالہ سے جدوجہد کرکے سندھ دھرتی کو پنجابی سامراج کے نرغے سے آزاد کرائیں اسی میں سندھ دھرتی اور سندھ دھرتی کے عوام کی فلاح ممکن ہے۔ 

آصف علی زرداری صاحب! مرض کی صحیح تشخیص کرنا اور اس کے علاج کیلے صحیح ادویات تجویز کرنا میرا کام ہے، ادویات خریدنا اور ہدایت کے مطابق انہیں استعمال کرنا آپ کا کام ہے
۔

September 21, 2015

Pakistan Army and ISI : Muslim Ummah's dream

ایک خواب


میں ابن وقاص بن حریری حلفیہ لرزہ دینے والایہ واقعہ تحریر کررہاہوں کہ گزشتہ رات میں تہجد کی نمازپڑھ کر مسجدنبوی مدینہ منورہ میں حسب روایت ورد کررہاتھاکہ میری آنکھ لگ گئی۔ پھرمیں نے ایک خواب دیکھاکہ چاروں طرف گھپ اندھیراہے۔۔۔کہیں کچھ دوردور یاقریب رکھی ہوئی چیز بھی نظر نہیں آرہی تھی کہ اچانک میری آنکھوں کے سامنے ایک گول دائرے میں مجھے پیلے رنگ کی چاند اوردیئے کی روشنی ہوتی ہوئی نظرآئی۔۔۔ میں ابھی اس روشنی کودیکھ یہ سوچ ہی رہاتھاکہ یااللہ! یہ کیسی روشنی ہے!!!۔۔۔کس کی روشنی ہے!!! ۔۔۔کہ اچانک اس روشنی میں سفیدلباس میں ملبوس انتہائی نورانی چہرے والے ایک باریش بزرگ نمودار ہوئے ۔ بے اختیار میرے منہ سے یہ الفاظ نکلے ۔ ’’ کیاآپ رسول اللہ ؐ ہیں؟۔۔۔یا۔۔۔یسوع مسیح ہیں ؟۔۔۔یا۔۔۔اس سے پہلے کہ میں کوئی تیسرانام لیتا، بزرگ نے ہونٹوں پر انگلی رکھ کرمجھے خاموش رہنے کااشارہ دیااورکہا ’’ اے نیک بخت ! میں تیرے پاس ایک خصوصی پیغام لیکربھیجاگیاہوں کہ آج جوتوپوری دنیامیں مسلمانوں کازوال دیکھ رہاہے کہ ہرجگہ وہ آپس میں دست وگریباں ہیں، کیاتجھے پتہ ہے یہ کون لوگ ہیں؟۔۔۔اوریہ ایساکیوں کررہے ہیں؟۔۔۔ دراصل یہ تربیت یافتہ اوربرین واش کئے ہوئے لوگ ہیں جنہیں پاکستان کی مسلح افواج خصوصاً آئی ایس آئی نے بڑی تگ و دو کے بعد تیار کیاتھا۔ اب تو ُ پاکستانی فوج اورآئی ایس آئی کوایک ادارہ سمجھ ر ہاہوگا۔۔۔نہیں ۔۔۔ہرگزنہیں۔۔۔یہ شیطان کے اس دعوے کادوسراروپ ہے جس میں اس نے کہاتھاکہ آدھی دنیاگزرجانے کے بعدمیں ایک دفعہ تیرے ماننے والوں کو بہکاؤں گا۔۔۔اوروہ شیطان دراصل پاکستانی فوج کے خون میں رچ بس گیاہے جومسلمانوں کا خون بہاکر ۔۔۔انہیں آپس میں لڑواکر۔۔۔ زمین پرفساد اورشرپھیلاکرخوشی اورمسرت محسوس کرتے ہیں۔۔۔پاکستانی فوج دراصل پاکستان کی فوج نہیں۔۔۔’’ آئی ایس آئی ‘‘پاکستان کی انٹرسروسز انٹیلی جنس نہیں بلکہ شیطان کے شیطانی خیالات کے فضلے سے بئے ہوئے لوگ ہیں جنہیں ختم کرنا ہرسچے ایمان والے پر لازم ہوتاہے کہ وہ اس شیطان کو ختم کرنے کے لئے میدان عمل میں آجائیں۔ ساتھ ہی بزرگ نے تاکید کی کہ یہ پیغام زبانی طورپر ۔۔۔تحریری طور پر ۔۔۔اورکمپیوٹر کے ذریعے دوسرے لوگوں تک پہنچاتے وقت یہ لکھنانہ بھولنا کہ جو اس خواب کوپڑھ کرمزید70جگہ آگے نہیں بڑھائے گا اسے رات سے ہی خون کی الٹیاں شروع ہوجائیں گی اورخون کے لوتھڑے اس کے منہ سے ایسے گررہے ہوں گے جیسے الٹی میں پیٹ کی گندی اورسڑی ہوئی غلاظت باہرنکلتی ہے۔ 

خیراندیش
تمہارا ہمدرد
اللہ حافظ 
یہ جملے کہہ کر وہ بزرگ غائب ہوگئے ۔۔۔ روشنی ختم ہوگئی ۔۔۔ اورپھراچانک میری آنکھ کھل گئی ۔

September 20, 2015

A Pakistani citizen demands: Defense Budget should be scrutinized

دفاعی بجٹ کم کیاجائے
تحریر:۔ غیورخان

یہ بات آج تک سمجھ میں نہیں آتی کہ پاکستان کا شمار غیرترقی یافتہ ملک میں  کیاجائے یا ترقی پذیر ملک میں۔ اگرپاکستان ترقی پذیر ملک ہے تو پھر ترقی یافتہ ممالک کی خیرات اور قرضوں کی آکسیجن پر کیوں زندہ ہے اور اگرغیرترقی یافتہ ملک ہے تو کیا ایسا ملک ایٹمی طاقت رکھنے کی عیاشی کا متحمل کیوں ہے؟چلو مان لیا کہ پاکستانی فوج دنیا کی بہترین فوج ہوگی اور پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کا شمار دنیا کی بہترین خفیہ ایجنسیوں میں کیاجاتا ہوگا لیکن صاحب اتنے عظیم القابات لینے کا پاکستان اور اس کے عوام کو کیا فائدہ؟ پاکستان کے غریب عوام خون پسینہ بہاکر جو کچھ کماتے ہیں اس کا بڑا حصہ تو ان کی جیبوں میں جارہا ہے جو ”کچھ نہیں کرتے، کمال کرتے ہیں“ یہی وہ لوگ ہیں جن کے بارے میں کہاجاتا ہے ”باکمال لوگ، لاجواب سروس“، اب اس سچائی کے اظہار پر برا منانے کی قطعی ضرورت نہیں ہے کہ پاکستان کا 70 فیصد بجٹ دفاع کے نام پر فوج کے پاس چلاجاتا ہے، الٹے سیدھے دھندے، منشیات کی اسمگلنگ اور دیگر غیرقانونی ذرائع سے ہونے والی آمدنی کے ذریعہ دنیا بھر میں پھیلے آئی ایس آئی کے نیٹ ورک کی کفالت کی جاتی ہے۔ایک پیشہ ور فوج کا کام سرحدوں کا دفاع کرنا ہے، ملک کی جغرافیائی اورنظریاتی سرحدوں کی حفاظت کرنا ہے اور اس عظیم مقصد کیلئے فوجی جوانوں کو سخت ذہنی وجسمانی محنت ومشقت اور آزمائشی مراحل سے گزرنا پڑتا ہے تاکہ وقت پڑنے پر دشمن کو منہ توڑ جواب دیاجاسکے لیکن صاحب ایک غریب کا بچہ بھی تو اس کے والدین سخت محنت ومشقت کرکے پال پوس کے بڑا کرتے ہیں تاکہ وہ ان کے بڑھاپے کا سہار ا بن سکے۔

 خیربات ہورہی تھی ہمارے فوجی جوانوں کی تربیت کی تو اتنی محنت ومشقت کے بعد فوج بن گئی لیکن جب ہمارے روایتی  دشمن بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی جانب میلی نگاہ سے دیکھا تو ان ملک دشمنوں سے نمٹنے کیلئے کبھی لشکر جھنگوی کی خدمات مستعار لی گئیں، کبھی لشکرطیبہ کے جوانوں کو کلمہ شہادت پڑھایاگیا، توکبھی سیاچن اور کارگل کے محاذپرپختونوں کو قربانی کابکرابنایاگیا۔ اگر ہماری فوج کو دشمن سے نہیں لڑنا تو پھریہ ہنگامہ اے خدا کیا ہے؟ پھراتنی بڑی فوج اور اس کے لامتناہی اخراجات کو بوجھ پاکستان کے غریب عوام کیوں برداشت کریں؟ پاکستان کا 70 فیصد بجٹ دفاعی اخراجات پرخرچ کرنے کیا وجہ باقی رہ جاتی ہے؟بھارت سے چار جنگیں لڑیں لیکن ہم کسی ایک جنگ میں فتح کا دعویٰ نہیں کرسکتے پھر بھی ڈھٹائی سے یہی کہاجاتا ہے کہ ہم بہترین فوج ہیں۔دنیا کے ہرملک کی طرح پاکستان کی فوج کے نظم وضبط کی بھی مثال دی جاتی ہے، لہوگرمادینے والے قومی ترانے اور شہدائے پاکستان کے بہادرانہ کارنامے سن کر اپنے  کی حفاظت کرنے والے فوجی جوانوں کو معلوم ہے کہ فوجی جرنیلوں کے سینوں میں دھڑکنے والے دلوں میں وطن عزیز کی سلامتی کیلئے جذبات،سچائی پرمبنی ہیں یا محض ریاکاری؟ اگر زندگی کے کسی موڑ پر انہیں یہ معلوم ہوجائے کہ فوجی افسران کی عیاشیوں کا شاہین کون سے جہانوں کی بلندی کو چھورہا اور ان غریب جوانوں عمر بھر کا سفر رائیگاں ہی ہے تو ذرا تصورکیجئے کیاان کی حالت مرغ بسمل کی مانندنہ ہوگی؟فوج کا کام دشمنوں سے لڑنا ہے،کاروباری امور میں ملوث ہونا نہیں ہے،مگر عسکری بنک، ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی، فوجی فرٹیلائزر، ملٹری ڈیری فارم، فوجی فوڈز، شاہین ائیرویز، فوجی شوگرملز، فوجی کولا، فوجی سیمنٹ، شادی ہال، واٹرہائیڈرنٹ، فوجی منرل واٹر اوردیگر کاروباری امور کچھ اور ہی کہانیاں پیش کررہے ہیں۔ کیا ایک پیشہ ور فوج کو کاروباری امور میں ملوث کرنا دانشمندانہ فیصلہ ہے؟

تاریخی حقائق یہ ہیں کہ دنیا کی ہرفوج، دشمن ملک کی فوج کیلئے رکھی جاتی ہے تاکہ جب ان کے وطن کی سلامتی پر کوئی بات آئے تو وہ دشمن فوج کے دانت کھٹے کرسکے لیکن پاکستان کی فوج دنیا کی واحد فوج ہے جو دشمن ملک کی تربیت یافتہ اور مسلح فوج سے لڑنے کے بجائے نہتے سویلین سے لڑنے کو ترجیح دیتی ہے۔ آپ پاکستانی فوج کو سعودی عرب بھجوادویہ سویلین کے خلاف نبردآزما ہوں گے، یمن، شام، عراق، لبنان اور افغانستان بھیج دویہ ان ممالک کے سویلین کو سیدھا کردیں گے، کیا سابقہ مشرقی پاکستان میں پاک فوج کے”عظیم الشان“کارنامے دہرانے کی ضرورت ہے؟حتیٰ کہ یہ مردمجاہد اپنے ہی ملک کے نہتے شہریوں پرزور آزمانے کا بھی کوئی موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیتے لیکن جب جب فوج یا رینجرز کا سامنا کسی ملک کی تربیت یافتہ مسلح فوج سے ہوا انہوں نے ہتھیار ہی ڈالے ہیں۔ جب نہتوں پر ظلم کرنے والوں کو کوئی نہیں ملتا تو یہ سورما اپنے ہی ہم وطن اور ہم مذہب بنگالی عوام پر پل پڑتے ہیں اور آدھاملک گنواکر بھی فخرسے کہتے ہیں کہ ”یہ تو کھیل کا حصہ ہے“، بڈھ بیر پشاور کے ائیربیس پر دہشت گردوں نے حملہ کرکے ہماری سیکوریٹی کاپول کھو ل دیا ہے لیکن ہم سب سیکھنے کیلئے تیار ہی نہیں ہیں اور اپنے ہی نہتے لوگوں پر زور آزمانے اورپنجہ لڑانے میں مصروف ہیں۔ ہمارے پالیسی سازوں کو اصل حکمرانوں کو ادراک نہیں کہ بھارت، ایران اور افغانستان سے ہمارے تعلق کشیدگی کی کس انتہاء کو چھو رہے ہیں اور پاک،چائنا تعلقات کے استحکام کا دارمدار بھی محض مفادات پر قائم ہے۔ملک کی سرحدوں پر دشمن ملک کی جارحیت جاری تھی اور جاری ہے۔آج بھی یہی صورتحال ہے، سرحدوں پر خطرات منڈلارہے ہیں، دشمن ملک کی توپوں کا رخ پاکستان کی جانب ہے لیکن ہماری فوج،دشمن ملک سے لڑنے کے بجائے اپنے ہی ملک کے شہریوں پر زور آزمانے میں مصروف ہے۔ ستم بالائے ستم یہ ہے کہ نہ صرف ان باتوں پرسنجیدگی سے غورکرنے کی ضرورت محسوس کی جائے گی بلکہ عاقبت وطن  کی بھینٹ چڑھایاجاتا رہے اورپاکستان کی غریب آبادی پینے کے صاف پانی، بجلی، گیس،صحت اورروزگارجیسے بنیادی مسائل کے دائرے سے باہر نہ نکل سکیں تو ہم جیسے دیوانوں کا کیا قصور ہے؟ہم ایٹمی قوت ہیں مان لیا صاحب لیکن کیا یہ ایٹم بم ہماری آنے والی نسلوں کو زیورتعلیم سے آراستہ کررہا ہے، کیا یہ ایٹمی قوت ہمارے عوام کو پانی، گیس اور بجلی کی سہولیات فراہم کررہی ہے، کیا تعلیمی اداروں سے فارغ التحصیل طلباء کو میرٹ کی بنیادپرملازمت کے مواقع میسرآرہے ہیں اگر ان سب باتوں کا جواب نفی میں ہے تو یہ ایٹمی قوت کا تمغہ سجاکر ہم ملک وقوم کی کیاخدمت کررہے ہیں؟

صاحب ہم نے ایٹم بناکر اپنا دفاع مضبوط کرلیا تو یہ بھارت ہماری سرحدوں پر
 روزانہ جارحیت کیوں کررہا ہے اور ہمارے پیراملٹری فورس کے جوان بھارتی جارحیت کا جواب دینے کے بجائے دہلی جاکر بھارتی افواج کی ہربات من وعن کیوں تسلیم کررہے ہیں۔ خدارا، قوم کوفریب نہ دیا جائے اور نہ خودفریبی کا شکارہوا جائے۔ اس حقیقت کوتسلیم کرلیاجائے کہ دنیا کی کوئی فوج، دشمن ملک سے لڑائی میں اس وقت تک کامیاب نہیں ہوسکتی جب تک کہ اس ملک کے عوام اپنی فوج کے شانہ بشانہ نہ ہوں، عوام متحد نہ ہوں، عوام کو انصاف میسر نہ ہو لہٰذا پاکستانی عوام کو ایک مضبوط قوم بنانے کیلئے جن عوامل اور اقدامات کی ضرورت ہے ان پر غورکیاجائے اور عمل کیا جائے تاکہ یہ ایک قوم بن کر پاک فوج کے شانہ بشانہ کھڑی ہو سکے اور اپنی فوج کو ہرمحاذ پر مضبوط کرسکے۔

September 18, 2015

How a local from Peshawar felt about the attack on Badaber Airbase Attack. Pakistan

بے غیرتی کاجنازہ 

( غیورخان)


نوحہ خوانی کریں۔۔۔ ماتم کریں۔۔۔یاپھراپنی بے غیرتی کاجنازہ نکالیں۔۔۔؟
جب کوئی قوم اجتماعی طورپربے غیرتی ۔۔۔بے حسی۔۔۔ اورذاتی مفادات کو اپنا دین دھرم اورایمان کاحصہ بنالے تو پھرایسی قوموں پر سقوط ڈھاکہ ہو۔۔۔کارگل اورسیاچن کی پسپائیاں ہوں۔۔۔مسئلہ کشمیرپر بات کرنے پر ٹانگیں لڑکھڑاتی ہوں۔۔۔نیول بیس مہران پر حملہ ہو ۔۔۔کامرہ ایئربیس پر حملہ ہو۔۔۔ایف آئی اے کی بلڈنگ کوبموں اوربارودسے اڑاکراسے ریت کاڈھیربنانے کاواقعہ ہو ۔۔۔کراچی ایئرپورٹ پر حملہ ہو۔۔۔ملک بھرمیں مساجد، امام بارگاہوں اورمزارات پر تواترکے ساتھ خودکش حملوں اوربم دھماکوں کے ذریعے معصوم انسانوں کی جانوں سے کھیلنے کاگھناؤناعمل ہو۔۔۔آرمی پبلک اسکول پر معصوم بچوں کاقتل عام ہو۔۔۔ یاکسی قوم کے عزت وآبروکے سب سے بڑے مرکز جی ایچ کیو پر دہشت گردوں کاحملہ ہواوردوروزتک اس پر قبضہ رہے ۔۔۔اس ملک کی فوج کی تعداد10لاکھ کے لگ بھگ ہو ۔۔۔جرنیلوں اورفوجی افسران کا جم غفیرہو۔۔۔روزانہ کاک ٹیل پارٹیز یاکھانے پینے کی پرتعیش تقریبات ہوں تو پھر ایسی قوم میں شرم وحیا کا مٹ جانا ۔۔۔ظرف وضمیر کامردہ ہوجانا۔۔۔بے غیرتی کی چادر۔۔۔وردی کاروپ دھارلیں۔۔۔اورعزت ووقارکی فوجی وردی بزدلی اور بے غیرتی کی علامت بن جائے توپھربڈھ بیر پشاورمیں ایئرفورس کے ایئربیس پر حملہ ہوناکوئی انہونی بات تونہیں ہوگی۔۔۔اورحملہ آوروں سے زیادہ تربیت یافتہ اوروطن کے دفاع کی تنخوا ہ لے کر موج اڑانے والے دوگنی سے زیادہ تعدادمیں دہشت گردوں کے ہاتھوں مارے جائیں تویہ سب کسی قوم کی غیرت کاجنازہ نکلنے سے کم تونہ ہوگا۔ اس کے بجائے فوج کے سپاہ گری کے ٹارزن فوجی وردیوں میں ملبوس ہوکرنہتے شہریوں پر باربارحملہ آورہوکر انہیں ہی فتح کرتے رہیں۔۔۔ظلم وبربریت کانشانہ بناتے رہیں۔۔۔اوردشمن کے سامنے آنے پر فوراًہتھیار پھینک
کر دہشت گردوں کوخراج تحسین پیش کرنے کیلئے سجدہ اقدس میں نہ چلے جائیں تو پھرکیاکریں !!!۔ سوائے اس کے کہ فوج کی بے غیرتی۔۔۔بے حسی پر نوحہ کناں ہوں۔۔۔ماتم کریں ۔۔۔یا۔۔۔بے غیرتی کاجنازہ نکالیں۔۔۔یاپھر اپنی شکست پر ’’شادمانی ہو ۔۔۔شادمانی ‘‘ کے گیت نہ گائیں توپھرکون ساراگ الاپیں !!!

September 12, 2015

A letter to all editors of Pakistani newspapers who are publishing paid words against AltafHussain but have no guts to publish this letter

Written by: A concerned citizen from Karachi, who feels the pain of his brothers getting killed by Pubjabi dominated paramilitary forces in Karachi
Looking at your choice of letters to publish only the anti-Altaf Hussain and anti-MQM letters in your Letters section, and your own editorials against the two, it is likely that you will refuse to publish my letter.  Still, with a sliver of hope that you might apply journalistic neutrality, I note the following facts for you and your readership’s review.  If you do print it, I thank you for publishing this letter in its entirety.
Under the internationally recognized norms of decency and the fundamental human rights, a demand for secession is never deemed as treason.  This is how Pakistan came into being – Indian Muslims separated from India because Muslims did not wish to live with the Hindus. In more recent times, this has been shown by the UK in its recent referendum for the secession of Scotland out of the UK.  In Canada, it was shown by a referendum related to Quebecois' secession from Canada, and in France, it was shown when its northwestern Brittany province had similar referendum.  Also, Singapore separated from Malaysia, East Timor from Indonesia, and South Sudan from Sudan – all becoming new nations pursuant to the very fundamental principle that is far above any man-made Constitution – the principle that people have a right to choose who they wish to live with and who they get away from.

August 26, 2015

Karachi Operation: A neutral perspective

There is no denying the fact that the crime rate has come down in the last few months in Karachi. However, that does not mean that all is going well in the metropolis. Neither does it absolve the law enforcement agencies of their duties towards the citizens.
Nobody has any objections on the operation against the hardened criminals in the city. However, the way this operation has been managed certainly raises some questions, at least from my side. Being a Karachiite, I have all the right to get the answers to these questions as well.
As per the spokespersons of the law-enforcement agencies, the current operation is being conducted across the board and without any discrimination. However, I only see the law enforcers glorifying and ‘advertising’ the arrests of and raids on MQM workers and offices. The way arrest of MQM workers is glorified, it certainly gives a partisan view to the ongoing operation. It is as if the law-enforcers want to portray MQM as the sole hand behind the prevalent chaos in Karachi – which is not the case. MQM does, indeed, have rogue elements within its cadres but so do all the other political, religious and sectarian parties in the city, and even does the Army. Mehran attack was an example of this inside element within the Army. I have not seen the law-enforcers portraying the arrests of others like the way they portray and promote MQM’s.

April 18, 2014

Timeline: How MQM workers Extra Judicialy Murdered by police Death Squads

Warning:

 This post contains graphic images of MQM workers arrested by Death Squad of Police working under direct instructions of Pakistan Peoples Party PPP and Sindh Government.

This Post has enough evidence to prove how MQM workers were arrested in Karachi and Murdered by Police Death Squads.
Through this post we appeal to Supreme Court of Pakistan, Chief of Army Staff, DG ISI and all International and Pakistani Human rights organizations to play their part in stopping Genocide of Mohajirs, MQM workers and supporters  

On 19 Dec 2013 Ummat Newspaper published a news that Javed Bunda a so called Target Killers who was granted bail by Court as the cases against him were proved to be fabricated and of political nature picked up by a Sensitive Agency from an area of Karachi called Shadman-North Karachi




On 24 Dec2013 Ummat News Paper published news of recovering 3 tortured dead bodies with their hands and legs tied and blind folded.






Next day Ummat published the news that the tortured bodies recovered from Super Highway with their hands and legs tied and blind folded identified as MQM workers one of them was Javed Bunda who was arrested on 18 Dec 2013 and news of his arrest was published by Ummat on 19 Dec 2013.



The story didn't finished yet

Speaking on the floor of Sindh Assembly, replying MQM allegations of Police Death Squads and Extra Judicial killings of MQM workers, Sharjeel Memon Information Minister of Sindh revealed that Javed Bunda was NOT extra Judicially Murdered but he was killed in encounter while he was firing on the police, The Police retaliated in self defense and killed Javed Bunda.

video




Our Questions to Sharjeel Memon, PPP and Sindh Government in extension to questions raised by Express TV,
  •  How Javed Bunda was firing on Police when his hands and legs were tied with rope?
  • Who gave him weapons to do firing on Police when he was arrested 5 days back?


The timeline above of Javed Bunda Extra Judicial killing with proofs from News paper known for Anti MQM propaganda and Confession of Sharjeel Memon that Javed Bunda was murdered by Police is enough to show the world Courts of Pakistan and the human rights organizations that how PPP Sindh Government is running Death Squads in Karachi to Murder MQM workers Supporters and Mohajirs.


Anyone in Pakistan willing to speak against this brutal injustice and genocide? Any Suo Moto of Supreme Court?


December 30, 2013

Lyari Gangwar Raped & Murdered family for its affaliation with MQM

Lyari Gangsters Militant wing of PPP headed by Bilawal Bhutto Zardari Gang Raped 3 women of a family and Murdered 5 members of the same family for their affiliation with Muttahida Qaumi Movement MQM .
These Lyari Gangsters affiliated with Uzair Baloch group which is run by PPP leader Zulfiqar Mirza is not only supported by Pakistan Peoples Party, PPP its chairman Bilawal Bhutto Zardari but also a criminal named as Habib Jan Baloch who is a British National.
Through this blog we ask International Human Rights Organizations, Women Rights Organizations and International Community to take notice of this horrific Gang Rape and Murder of Men Women and Children just for their affiliation with MQM.
It is also worth noting that not a single channel or Anchor and Judiciary raised this issue nor any Human Rights Organization or Political Party stage any demonstration against this brutal Rape and Murder as Victims were related to MQM.
We demand and her family.


 
Two ‘Lyari gangsters’ arrested for shooting dead four family members and assaulting women as punishment for returning home in their territory
 
 
M. Waqar Bhatti Tuesday, December 31, 2013
From Print Edition
 

 
Karachi
Police have arrested two alleged gangsters of a Lyari-based gang for murdering a couple and their two children after raping the woman and her daughter on December 29.

On Monday, the West Zone police claimed to have arrested two suspects associated with the Rashid alias Chief gang of Lyari for killing the couple and their two children before subjecting the woman and her newly married daughter to sexual assault.

DIG West Javed Alam Odho announced the arrests of the two men named Adil Baloch and Yasin Baloch, alleging the two “gangsters” along with three more accomplices had sexually assaulted Shazia and her daughter and killed the three men. “The Rashid alias Chief gang is affiliated with the Uzair Baloch group and they attacked the family for the man’s association with the Muttahida Qaumi Movement,” Odho said.

SSP West Irfan Baloch told The News that Muzaffar Baig had been expelled from his house in Musharraf Colony a few months ago by the Lyari gangsters over his political affiliations. The man had recently returned to his residence but the police were unaware of his return although he had been facing threats from the gangsters.

“Adil and Yasin have confessed to killing the four family members and sexually assaulting the married girl and her mother, saying they were ‘punished’ for returning to their home despite being barred by them,” he said. Two .30 pistols and a grenade was found on the suspects. Three of the alleged accused are still at large.

The SSP West said police with the help of commandos were conducting operation in Musharraf Colony, Customs Colony, 500 Quarters and other surrounding areas of Naval Colony. Many more suspects have been rounded up for interrogation. The residence of Rashid alias Chief was also raided but he was not there.

Muzaffar Baig, 45, his 40-year-old wife Shazia and their sons Imran, 28, and Samad, 22, were shot dead while the 18-year-old married daughter of the couple was injured in an early morning attack in Mauripur’s Musharraf Colony.

The survivor had told the police she had come to visit her family home with her two-year-old daughter from Lyari. In the wee hours of Sunday, five men barged into the house and held the family hostage at gunpoint.

The men were all drunk and tried to rape her and her mother. When her father and brothers resisted them, the suspects started firing at the family members and killed them before fleeing. One of the victims, Imran, was an adopted son of the family.

Lyari Gangwar Gang Raped and Murdered Family

Lyari Gangwar militant wing of Pakistan Peoples Party PPP headed by Bilawal Bhutto Zardari Gang raped Mother Daughter and murdered the whole family.
No TV channel did program on this gruesome murder and gang rape. This Gang rape and Murder expose Police and Rangers who are not taking any action against terrorists and criminals instead arresting innocent Mohajirs and MQM workers and making fake cases against them who refuse to pay bribe to them




December 24, 2013

PPP terrorists gang raped 50 girls in Karachi

Lyari Gangwar terrorists associated with Uzair Baloch, head of Peoples Aman Committee, militant wing of Pakistan Peoples Party PPP headed by Bilawal Bhutto Zardari confessed to Gang Rape more than 50 girls in Lyari and its surrounding areas. According to news Lyari Gangsters associated with PPP gang raped 100's of girls belonging to Katchi and Mohajirs families and also raped Baloch girls who are against PPP and Lyari Gangwar.
These Lyari gangsters are run by Bilawal Bhutto Zardari and his father close friend Zulfiqar Mirza and a British National Habib Jan Baloch.



British National Habib Jan Baloch Overseas head of terrorist of Lyari with Terrorist Uzair Jan Baloch

Zulfiqar Mirza with Head of Lyari Terrorists Uzair Jan Baloch

wibiya widget

Target Killers and their Heads in Karachi Exposed